Educational News

Punjab Civil Servant Ordinance 2024: Major Changes in Pension and Gratuity

Punjab Civil Servant Ordinance 2023: Major Changes in Pension and Gratuity
Punjab Civil Servant Ordinance 2023: Major Changes in Pension and Gratuity

Punjab Civil Servant Ordinance 2023: Major Changes in Pension and Gratuity

The Punjab Civil Servant Ordinance 2023 has made significant changes in the pension and gratuity schemes for Punjab government employees. The Ordinance, which came into force immediately after its publication, aims to modernize the pension system and provide more flexibility for civil servants.

Important Changes

  • Introduction of Defined Contribution Pension Scheme: A new “Defined Contribution Pension Scheme” has been introduced for Government servants recruited on or after the commencement of the Ordinance. Under this scheme, both the government and the employee will contribute to the pension account. The accumulated balance in the account will be used to generate regular pension income after retirement.

Extension of Pension Eligibility: The Ordinance has extended pension eligibility to Government servants who have been dismissed or removed from service for disciplinary reasons. However, such Government servants will get only a compassionate allowance, not exceeding two-thirds of the pension, to which they would have been entitled if they had voluntarily retired.

Provisional Payment of Pension: In cases where the determination of pension or gratuity is delayed by more than one month from the date of retirement or death, provisional payment will be made to the Government servant or his family. Any overpayment will be adjusted against the final amount of pension or gratuity.

  • Prescribing Authority: The Ordinance establishes a Prescribing Authority responsible for determining the amount of pension or gratuity payable to Government servants.

Frequently Asked Questions

Who is eligible for Defined Contribution Pension Scheme?

Government servants recruited on or after the commencement of the Ordinance.

How will the Defined Contribution Pension Scheme be financed?

Both the government and the employee will contribute to the pension account. The contribution of the Government will be determined by the prescribed authority.

What about the pension of Government servants who were appointed before the commencement of the Ordinance?

Government servants appointed before the commencement of the Ordinance will continue to receive their existing pension schemes.

What is Compassionate Allowance for dismissed or removed Government Servants?

A compassionate allowance for dismissed or removed Government servants, not exceeding two-thirds of the pension to which the Government servant would have been entitled.

How will Provisional Pension Payment be made?

In cases where there is delay in the determination of pension or gratuity, provisional payment will be made to the Government servant or his family. The amount of provisional payment shall be determined by the recommending authority.

Who is the designated authority for determination of pension and gratuity?

A designated authority will be established by the government for determination of pension and gratuity.

Result

The Punjab Civil Servants Ordinance 2023 represents a major step towards modernizing the pension and gratuity schemes for Punjab government employees. The introduction of a defined contribution pension scheme aims to provide greater flexibility and security for civil servants, while the extension of pension eligibility and the provision of temporary payments address concerns raised in the past. It is expected that the Ordinance will have a positive impact on the overall welfare of the Civil Service of Punjab.

پنجاب سول سرونٹ آرڈیننس 2023: پنشن اور گریجویٹی میں اہم تبدیلیاں

پنجاب سول سرونٹ آرڈیننس 2023 میں پنجاب کے سرکاری ملازمین کے لیے پنشن اور گریجویٹی سکیموں میں اہم تبدیلیاں کی گئی ہیں۔ آرڈیننس، جو اس کی اشاعت کے فوراً بعد نافذ ہوا، اس کا مقصد پنشن کے نظام کو جدید بنانا اور سرکاری ملازمین کے لیے مزید لچک فراہم کرنا ہے۔

اہم تبدیلیاں

  • تعین شدہ کنٹری بیوشن پنشن اسکیم کا تعارف: آرڈیننس کے آغاز پر یا اس کے بعد بھرتی ہونے والے سرکاری ملازمین کے لیے ایک نئی “تعریف شدہ کنٹری بیوشن پنشن اسکیم” متعارف کرائی گئی ہے۔ اس اسکیم کے تحت حکومت اور ملازم دونوں پنشن اکاؤنٹ میں حصہ ڈالیں گے۔ اکاؤنٹ میں جمع شدہ بیلنس کو ریٹائرمنٹ کے بعد باقاعدہ پنشن آمدنی پیدا کرنے کے لیے استعمال کیا جائے گا۔

پنشن کی اہلیت میں توسیع: آرڈیننس نے ان سرکاری ملازمین کے لیے پنشن کی اہلیت میں توسیع کی ہے جنہیں تادیبی وجوہات کی بنا پر ملازمت سے برخاست یا ہٹا دیا گیا ہے۔ تاہم، ایسے سرکاری ملازمین کو صرف ایک ہمدردی الاؤنس ملے گا، جو پنشن کے دو تہائی سے زیادہ نہیں ہوگا، اگر وہ رضاکارانہ طور پر ریٹائر ہوتے تو وہ اس کے حقدار ہوتے۔

پنشن کی عارضی ادائیگی: ایسے معاملات میں جہاں پنشن یا گریجویٹی کے تعین میں ریٹائرمنٹ یا موت کی تاریخ سے ایک ماہ سے زیادہ کی تاخیر ہوتی ہے، سرکاری ملازم یا اس کے خاندان کو عارضی ادائیگی کی جائے گی۔ کسی بھی زائد ادائیگی کو پنشن یا گریجویٹی کی حتمی رقم کے ساتھ ایڈجسٹ کیا جائے گا۔

  • پریسکرائبنگ اتھارٹی: آرڈیننس نے ایک پریسکرائبنگ اتھارٹی قائم کی ہے جو سرکاری ملازمین کو قابل ادائیگی پنشن یا گریجویٹی کی رقم کا تعین کرنے کے لیے ذمہ دار ہے۔

اکثر پوچھے گئے سوالات

تعریف شدہ کنٹری بیوشن پنشن اسکیم کے لیے کون اہل ہے؟

سرکاری ملازمین جو آرڈیننس کے آغاز پر یا اس کے بعد بھرتی ہوئے۔

** متعین کنٹریبیوشن پنشن اسکیم کی مالی اعانت کیسے کی جائے گی؟**

حکومت اور ملازم دونوں پنشن اکاؤنٹ میں حصہ ڈالیں گے۔ حکومت کی شراکت کا تعین مقررہ اتھارٹی کرے گی۔

سرکاری ملازمین کی پنشن کا کیا ہوگا جو آرڈیننس کے آغاز سے پہلے تعینات ہوئے تھے؟

آرڈیننس کے آغاز سے پہلے تعینات ہونے والے سرکاری ملازمین اپنی موجودہ پنشن سکیمیں حاصل کرتے رہیں گے۔

برطرف یا ہٹائے گئے سرکاری ملازمین کے لیے ہمدردی الاؤنس کیا ہے؟

برطرف یا ہٹائے گئے سرکاری ملازمین کے لیے ایک ہمدردی الاؤنس، پنشن کے دو تہائی سے زیادہ نہیں جس کا سرکاری ملازم حقدار ہوتا۔

پنشن کی عارضی ادائیگی کیسے کی جائے گی؟

ایسے معاملات میں جہاں پنشن یا گریجویٹی کے تعین میں تاخیر ہوتی ہے، سرکاری ملازم یا اس کے خاندان کو عارضی ادائیگی کی جائے گی۔ تجویز کرنے والی اتھارٹی عارضی ادائیگی کی رقم کا تعین کرے گی۔

پنشن اور گریجویٹی کے تعین کے لیے نامزد اتھارٹی کون ہے؟

پنشن اور گریجویٹی کے تعین کے لیے حکومت کی طرف سے نامزد اتھارٹی قائم کی جائے گی۔

نتیجہ

پنجاب سول سرونٹ آرڈیننس 2023 پنجاب کے سرکاری ملازمین کے لیے پنشن اور گریجویٹی سکیموں کو جدید بنانے کی جانب ایک اہم قدم کی نمائندگی کرتا ہے۔ ایک متعین کنٹریبیوشن پنشن سکیم کے تعارف کا مقصد سرکاری ملازمین کے لیے زیادہ لچک اور تحفظ فراہم کرنا ہے، جبکہ پنشن کی اہلیت میں توسیع اور عارضی ادائیگیوں کی فراہمی ماضی میں اٹھائے گئے خدشات کو دور کرتی ہے۔ توقع ہے کہ آرڈیننس پنجاب کی سول سروس کی مجموعی بہبود پر مثبت اثرات مرتب کرے گا۔

سرکاری ملازمین کی پنشن سے متعلق ترمیمی آرڈیننس جاری کر دیا گیا

کنٹریبیوشن پینشن اسکیم کے تحت حکومت اور سرکاری ملازم دونوں پینشن اکانٹ میں حصہ ڈالیں گے، آرڈیننس

یہ رقم پنشن فنڈ میں سرکاری ملازم کی ریٹائرمنٹ تک انویسٹ کی جائے گی، آرڈیننس

ریٹائرمنٹ پر پنشن فنڈ میں جمع کی گئی رقم کو دوبارہ انویسٹ کرکے سرکاری ملازم کی ماہانہ پنشن کی ادائیگی کی جائے گی، آرڈیننس

کنٹریبیوشن پنشن سکیم کا اطلاق آرڈیننس کی جاری کردہ تاریخ یا اس کے بعد بھرتی ہونے والے سرکاری ملازمین پر ہوگا، آرڈیننس

آئین کے آرٹیکل 128 کی شق (01) کے تحت گورنر پنجاب بلیغ الرحمان نے سرکاری ملازمین ترمیمی آرڈیننس جاری کردیا…..!!!!!

Punjab employees Ordinance 2023 pdf file

Majid

I am a passionate and dedicated government teacher with a Master’s degree in English, providing me a solid foundation for teaching and writing. As a skilled content writer and part-time news caster, I engage readers with captivating content and deliver accurate information. I firmly believe in education's transformative power, the impact of effective communication, and staying updated to contribute positively to education, writing, and news reporting.

Related Articles

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

Back to top button